SIRAJ 15

بونیر: مینارٹی کے خلاف نہیں ہے تاہم میاں عاطف کو اہم عہدے پر فائز کرنا افسوس ناک ہے سیراج الحق

شوکت علی ریڈیو بونیر
جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی امیر سنیٹر سیراج الحق نے کہا ہے کہ نئی حکومت کے آتی ہی مہنگائی میں اضافہ ہواہے جوکہ لمحہ فکریہ ہے ،مینارٹی کے خلاف نہیں ہے تاہم میاں عاطف کو اہم عہدے پر فائز کرنا افسوس ناک ہے ،مرکزی حکومت فوری طور پر متنازعہ شخص کواہم منصب سے ہٹائے ،ملک کی تاریخ میں پہلی بار ایک نئی حکومت نے آتے ہی گیس کے قیمتوں میں 186فیصد بجلی کی فی یونٹ میں دو روپے اوریوریا کی قیمتوں میں فی بوری 800روپے اضافہ کر کے عوام کو حیران کر دئے ہیں،جماعت اسلامی حکومت کے سودن پورے ہونے کے بعد حالات کا جائیزہ لیکر آئندہ کیلئے لائحہ عمل کا اعلان کرے گی ،بلاامتیاز احتساب سب کا ہونا چاہئے ۔اور قومی دولت لوٹنے والوں کے خلاف بھر پور کاروائی ہونی چاہئے،ان خیالات کا اظہار انہوں نے دورہ بونیر کے موقع پر اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا جس میں اراکین کی تعداد بہت کم نظر آئی،ا

س موقع پر سابق امیدوار صوبائی اسمبلی راج ولی خان اور دیگر بھی موجود تھے ،سیراج الحق نے کہاکہ جماعت اسلامی محض ایک سیاسی جماعت نہیں بلکہ ایک ہمہ گیر تحریک کا نام ہے،ہمارا سیاست محض الیکشن تک محدود نہیں بلکہ ہم سال بھر اقتدار میں بھی اور اقتدار کے بغیر بھی عوام کے درمیان رہتے ہیں اور ملک میں اسلامی نظام کے نفاذ کیلئے جمہوری جدوجہد کررہے ہیں۔اور ہماری سیاست کا محور کرپٹ اور نظریہ پاکستان سے بے وفائی کرنے والوں کے ہاتھوں سے اختیار لینا ہے۔اور ہم اس جدوجہد کا یہ تسلسل جار ی رکھیں گے،سینٹر سیراج الحق نے کہا کہ مرکزی حکومت سے عوام کے بہت سے توقعات وابستہ ہے ،جن کو پورا کرنا حکومت کی بس کی بات نہیں ہے ۔کرپشن کے خاتمہ اور تبدیلی کے نام پر ووٹ لینے والے پاکستان تحریک انصاف کے وفاقی کابینہ میں ایسے وزراء موجود ہے ۔جو کئی مقدمات میں نیب کومطلوب ہے ۔اور حکومت کے اتحادیوں میں بہت سے نام ایسے ہیں جنہوںنے بنکوں سے اربوں روپے لیکر معاف کروائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں