TMA Daggar 21

بونیر: تحصیل کونسل ڈگر کا اجلاس، فنڈکٹوتی کے خلاف کونسلران سراپا احتجاج

شوکت علی ریڈیو بونیر
تحصیل کونسل ڈگر کا اجلاس،صوبائی حکومت کی جانب سے فنڈکتوتی کے خلاف کونسلران سراپا احتجاج،اے ڈی پی برائے سال 2018-19 نو کروڑ ساٹھ لاکھ روپے اتفا قق رائے سے منظور،حکومت سے آخری ترقیاتی فنڈ میں کٹوتی نہ کرنے کا مطالبہ، موجودہ حکومت کے مہنگائی ،موجودہ بلدیاتی نظام کے قبل ازوقت خاتمے کیخلاف اور بلدیاتی فنڈ سے کٹوتی کیخلاف اتفاق رائے سے قرار دادیں منظور کئے گئے ۔

تفصیلات کے مطابق تحصیل کونسل ڈگر کا اجلاس زیر صدارت کنوینرخالدخان منعقدہوا جس میں کونسل کے ممبران کے علاوہ سرکاری محکمہ کے آفیسران نے شرکت کی ،اس موقع پر ٹی ایم او آمین خان بھی موجود تھے ،تحصیل ناظم مولانا سعید الرحمان مفکر نے کہا کہ 2015-16 کے فنڈز میں سے چار کروڑ ،دوسرے سال چار کروڑ اور تیسرے سال کے ترقیاتی فنڈز میں سے بھی کٹوتی کی گئی ۔

ٹی ایم اے کی بلڈنگ کے لئے زمین خرید نے کے لئے تحصیل ناظم کی سربراہی میں کمیٹی بنائی گئی ۔جو پرائیویٹ زمین خرید نے کے لئے کو شیش کرے گی ۔انہوں نے کہا کہ ٹی ایم اے ڈگر کی بیوٹی فیکیشن فنڈز سے ہیڈکوارٹر ہسپتال ڈگر ،گور نمنٹ ڈگری کالج جوڑ اورتحصیل گدئزی میں 48 لاکھ روپے کی لاگت سے کام جاری ہے ۔

انہوں نے کونسل کے تمام ممبران سے کہا کہ وہ ایک ہفتہ کے اندر اندر اپنے اپنے یونین کونسل کے ترقیاتی منصوبے ٹی ایم اے ڈگر میں جمع کرے ، اس موقع پر موجودہ حکومت کے مہنگائی ،موجودہ بلدیاتی نظام کے قبل ازوقت خاتمے کیخلاف اور بلدیاتی فنڈ سے کٹوتی کیخلاف قرار دادیں منظور کئے گئے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں