id card 24

ووٹ اندراج شناختی کارڈ کے پتے پر کر نیکا فیصلہ

پشاور۔
ووٹ کا اندراج صرف شناختی کارڈ پر درج مستقل یا عارضی پتہ پر ہوگا۔ کسی دیگر پتہ پر درج ووٹر 31دسمبر 2018تک اپنے ووٹ شناختی کارڈ کے مطابق مستقل یا عارضی پتہ پردرج کروالیں ان خیالات کا اظہار صوبائی الیکشن کمشنر خیبر پختونخوا پیر مقبول احمد نے پشاور میں خیبرپختونخوا کے تمام رجسٹریشن افسران/ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنرز کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں جا ئنٹ سیکرٹری الیکشن کمیشن محمد رازق ڈائریکٹر شعبہ انتخابی فہرست بابر ملک، ڈپٹی ڈائریکٹر شعبہ انتخابی فہرست اظہر محمود، ڈائریکٹر آئی ٹی خیبر پختونخوا، ڈائریکٹر لوکل گورنمنٹ رحم کریم، ڈائریکٹر الیکشن شہزاد احمد ، صوبائی الیکشن کمشنر خیبر پختوننخوا کے دفتر کے دیگر افسران سمیت خیبر پختونخوا کے رجسٹریشن افسران/ ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنرز نے شرکت کی انہوں نے کہا کہ عام انتخابات میں تمام افسران نے کا کردار کلیدی رہا۔ ا ور ان کے لگن اور قومی جذبہ کی بدولت یہ انتہائی اہم مرحلہ بطریقہ احسن تکمیل کو پہنچا۔

پیر مقبول احمد نے مزید کہا کہ یہ اجلاس اس لحاظ سے اہم ہے کہ اس میں الیکشن ایکٹ 2017کے سیکشن 27پر عمل درآمد کے لئے بحث کی جائیگی۔ انہوں نے رجسٹریشن افسران پر زور دیا کہ انتخابی فہرستوں پر عمل درآمد کرانے کے لئے اپنے تجربات اور زمینی حقائق کو مدنظر رکھ کر تجاویز دیں تاکہ کوئی ووٹر ووٹ کے حق سے محروم نہ رہے صوبائی الیکشن کمشنر نے مزید کہاکہ الیکشن ایکٹ 2017کے سیکشن 27کے مطابق اب انتخابی فہرست میں ووٹ کا اندراج شناختی کارڈ پر درج مستقل یا عارضی پتہ پر ہوگا۔

اس موقع پر ڈائریکٹر بابر ملک نے شرکاء کو اس شق کے حوالہ سے تفصیلی بریفنگ دی انہوں نے کہا کہ ایسے تمام رائے دہندگان جن کے ووٹ شناختی کارڈکے علاوہ کسی دیگر پتہ پر درج ہیں وہ31دسمبر2018تک اپنے ووٹ شناختی کارڈ کے مطابق درست کروالیں جوائینٹ سیکرٹری محمد رازق نے اس موقع پر اپنے خطاب میں کہا۔ کہ اس سلسلے میں الیکشن کمیشن جلد ایک ووٹر آگاہی مہم شروع کر رہا ہے تاکہ دیگر ایڈریس پر درج ووٹرز کو آگاہ کیا جائے کہ وہ اپنا ووٹ شناختی کارڈ پر درج ایڈریس کے مطابق بنائیں تمام رجسٹریش افسران نے بھی اس حوالہ سے تجاویز دیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں