jhagra 12

سوروزہ پلان ٗ 10کے بجائے 24اصلاحاتی اقدامات

پشاور۔
خیبر پختونخوا حکومت سوروزہ پلان کے تحت محکموں میں دس کی بجائے چوبیس اصلاحاتی اقدامات اٹھا رہی ہے، نئی اصلاحات میں مختلف شبعوں کی پالیسی، پلاننگ سمیت استعداد کار کو بڑھانا ہے جس میں آئی ٹی ماسٹر پلان، ای گورننس اور پشاور ڈویلپمنٹ پلان جیسے بڑے منصوبے شامل ہیں، ان خیالات کا اظہارخیبر پختونحواکے وزیرخزانہ تیمور سلیم جھگڑہ نے بدھ کے روزیہاں سے جاری ایک بیان میں کیا۔

سو روزہ پلان کیلئے خیبر پختونخوا کے وزیر خزانہ تیمور سلیم جھگڑہ سٹریٹیجک سپورٹ یونٹ کی مدد سے محکوں کے سو روزہ پلان کے حوالے سے منصوبہ بندی میں مدد کررہے ہیں اور اس مد میں پیش رفت کا باقاعدہ طور پر جائزہ بھی لے رہے ہیں۔ سو روزہ ایجنڈہ کے حوالے سے آئندہ پانچ سال کیلئے معیاری اورپختہ اقدامات کیلئے تمام شعبوں میں تیزی سے منصوبہ بندی جاری ہے۔

اور کئی بنیادی کام انجام پاچکے ہیں جبکہ ایجوکیشن اور صحت کے شعبوں میں ٓائندہ پانچ سالہ منصوبہ بندی کے حوالے سے ڈرافٹ تیار ہے اور حال ہی میں صوبے کیلئے سیاحتی حکمت عملی بھی شروع کی گئی ہے جو کہ سوروزہ پلان کا حصہ ہے۔ وزیرخزانہ کا کہنا تھا کہ حکومت نے صحت انصاف کارڈ کی آٹھ لاکھ مزید خاندانوں تک توسیع کا اردہ کیا ہے اور اس کو فاٹا کے نئے ضم شدہ اضلاع تک بڑھایا جائے گا۔ نجی شعبے کی شراکت سے نوجوانوں کیلئے روزگار کے مواقع بڑھانے اور انٹرپرینیورشپ کو ترویج دینے کیلئے پانچ بلین روپے کی خطیر رقم مختص کی گئی ہے۔ سستے اور بروقت انصاف کی فراہمی کیلئے خیبرپختونخوا جوڈیشل ریفارم پیکج بھی تیار کیا جارہا ہے۔

حکومت خیبرپختونخوا کی نافذکردہ پولیس اصلاحا ت کے ذریعے اس ڈیپارٹمنٹ کو مزید مستحکم بنایا جائے گا۔ خیبر پختونخوا ور قبائلی علاقوں کے انضمام کے معاملے کی اہمیت کو مدنظر رکھتے ہوئے فاٹا سیکرٹریٹ کے ساتھ مل کراس انضمام کو حتمی شکل دینے کیلئے طریقہ کار وضع کیا جارہاہے اور بہت جلد نئے ضم شدہ اضلاع کیلئے ترقیاتی پیکج کا اعلان کیا جائے گا۔ اس مد میں پانچ ڈیپارٹمنٹس بشمول صحت، تعلیم، بہبودآبادی، زکواۃ ا ور سوشل ویلفئیر پہلے ہی سے صوبے میں ضم کئے جاچکے ہیں۔ صوبے میں معاشی سرگرمیوں کو فروغ دینے اور سرمایہ کاروں کیلئے آسانیاں فراہم کرنے کی غرض سے صنعتی واقتصادی حکمت عملی پر کام جاری ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں